جڑی بوٹیاں اور ان کے فوائد 0

جڑی بوٹـیـوں سے قدرتی علاج کی اہمیت

جڑی بوٹـیـوں سے قدرتی علاج کی اہمیت

قبل اس کے کہ قدرتی جڑی بوٹیوں سے علاج کی اھمیت کے بارے میں دوستوں کو آگاہ کروں ایک اھم جملہ عرض کرنا چاھتا ھوں جو ھمیں سمجھ لینا چاھیئے کہ
ھمارے قدرتی جسم کی درستگی کیلئے قدرتی اشیاء ھی کی ضرورت ھے،،،،،،

اگرچہ زمانۂ جدید کی ضرورتوں کے مطابق ھم مصنوعی اشیاء کے استعمال اور مصنوعی علاج معالجہ کروانے پر مجبور ھیں لیکن طویل عرصہ کے مصنوعی اور کیمیکل طریقوں سے ھمارا جسم بھی مصنوعی بن جائے گا اور ھم زندگی کی حقیقی لذت سے محروم ھوکر مصنوعی زندگی گذار رھے ھونگے، انسانی جان بچانے کیلئے وقتی طور پر یا کچھ عرصے کیلئے کیمیکل علاج اگرچہ ضروری ھے لیکن کیمکل کا مستقل استعمال جسمِ انسانی کو کیمیکل سے بھر دے گا جس کے نتائج کچھ اچھے نہیں نکلتے،

ﺟﮍﯼ ﺑﻮﭨﯿﺎﮞ ﺑﯿﻤﺎﺭﯾﻮﮞ ﮐﮯ ﻋﻼﺝ ﻣﯿﮟ ﺍﺩﻭﯾﺎﺕ ﮐﺎ ﺑﮩﺘﺮﯾﻦ ﻣﺘﺒﺎﺩﻝ ﺍﻭﺭ ﻋﻼﺝ ﻣﻌﺎلجے ﮐﺎ ﻣﻌﺮﻭﻑ ﺭﻭﺍﯾﺘﯽ ﻃﺮﯾﻘﮧ ﺑﮭﯽ ھیں۔ ﺟﮍﯼ ﺑﻮﭨﯿﻮﮞ ﮐﮯ ﻃﺮﯾﻘﮧ ﻋﻼﺝ ﮐﻮ ﭘﯿﺘﮭﻮﺗﮭﺮﺍﭘﯽ، ھرﺑﻞ ﺍِﺯﻡ ﺍﻭﺭ ﻧﺒﺎﺗﺎﺗﯽ ﺍﺩﻭﯾﺎﺕ ﮐﮯ ﻧﺎﻡ ﺳﮯ ﺑﮭﯽ ﺟﺎﻧﺎ ﺟﺎﺗﺎ ھے۔ ﺟﮍﯼ ﺑﻮﭨﯿﻮﮞ ﮐﯽ ﺍﺩﻭﯾﺎﺕ ﮐﺎ ﺑﻨﯿﺎﺩﯼ ﻧﻈﺎﻡ ﺍٓﯾﻮﺭﻭﯾﺪﮎ ھرﺑﻞ ﺍِﺯﻡ، ﺭﻭﺍﯾﺘﯽ ﭼﯿﻨﯽ ﺍﻭﺭ یونانی ﻃﺮﯾﻘﮧ ﻋﻼﺝ ﭘﺮ ﻣﺸﺘﻤﻞ ھے۔ ﻣﺘﻌﺪﺩ ﺟﮍﯼ ﺑﻮﭨﯿﺎﮞ ﺣﯿﺮﺕ ﺍﻧﮕﯿﺰ ﻋﻼﺝ ﮐﯽ ﺻﻼﺣﯿﺖ ﺳﮯ ﻣﺎﻻﻣﺎﻝ ھوﺗﯽ ھیں۔ ﻧﺒﺎﺗﺎﺗﯽ ﺍﺩﻭﯾﺎﺕ ﮐﮯ ﺫﺭﯾﻌﮯ ﻗﺪﯾﻢ ﻃﺮﯾﻘﮧ ﻋﻼﺝ ﻧﮧ ﺻﺮﻑ ﺟﺴﻤﺎﻧﯽ ﺑﻠﮑﮧ ﻧﻔﺴﯿﺎﺗﯽ ﺑﯿﻤﺎﺭﯾﻮﮞ ﮐﺎ ﺑﮭﯽ ﺑﮩﺘﺮﯾﻦ ﺫﺭﯾﻌﮧ ﻋﻼﺝ ھے۔ ﯾﮩﺎﮞ ﺍٓﭖ ﮐﻮ ﺟﮍﯼ ﺑﻮﭨﯿﻮﮞ ﮐﯽ ﺍﺩﻭﯾﺎﺕ ﮐﮯ ﭼﻨﺪ ﺍھم ﺗﺮﯾﻦ ﻓﻮﺍﺋﺪ ﺳﮯ ﺍٓﮔﺎﮦ کرنا مقصود ھے۔
ﻗﺪﺭﺗﯽ ﻋﻼﺝ :
ﻧﺒﺎﺗﺎﺗﯽ ﺍﺩﻭﯾﺎﺕ ﮐﺴﯽ ﺑﮭﯽ ﻣﺮﺽ ﮐﮯ ﻋﻼﺝ ﻣﯿﮟ ﺟﺴﻢ ﮐﯽ ﺍﺯ ﺧﻮﺩ ﻋﻼﺝ ﮐﯽ ﺻﻼﺣﯿﺖ ﮐﻮ ﻧﻘﺼﺎﻥ ﻧﮩﯿﮟ ﭘﮩﻨﭽﺎﺗﯿﮟ ﺍﻭﺭ ﻧﮧ ھی ﺍﻥ ﮐﯽ ﻭﺟﮧ ﺳﮯ ﺩﻭﺳﺖ خلیئے ﻣﺘﺎﺛﺮ ھوﺗﮯ ھیں۔ ﻟﮩﺬﺍ ﺍﻥ ﮐﮯ ﺫﺭﯾﻌﮯ ﺯﺧﻢ ﯾﺎ ﺑﯿﻤﺎﺭﯼ ﮐﺎ ﻗﺪﺭﺗﯽ ﻋﻼﺝ ﮐﯿﺎ ﺟﺎﺳﮑﺘﺎ ھے۔
ﻓﻮﺍﺋﺪ ﮐﺎ ﺗﺴﻠﺴﻞ :
ﺟﮍﯼ ﺑﻮﭨﯿﻮﮞ ﮐﮯ ﺫﺭﯾﻌﮯ ﺑﯿﻤﺎﺭﯾﻮﮞ ﮐﮯ ﻋﻼﺝ ﻣﯿﮟ ﻏﺬﺍ، ﺍٓﺭﺍﻡ ﺍﻭﺭ ﻭﺭﺯﺵ ﮐﺎ ﺧﺼﻮﺻﯽ ﺧﯿﺎﻝ ﺭﮐﮭﻨﮯ ﮐﯽ ھدﺍﯾﺖ ﮐﯽ ﺟﺎﺗﯽ ھے، ﺟﻮ ﻧﮧ ﺻﺮﻑ ﺑﯿﻤﺎﺭﯼ ﮐﺎ ﺟﻠﺪ ﻗﻠﻊ ﻗﻤﻊ ﮐﺮ ﺩﯾﺘﯽ ھے ﺑﻠﮑﮧ ﺍﻧﺴﺎﻧﯽ ﺟﺴﻢ ﭘﺮ ﺍﺱ ﮐﮯ ﺩﯾﺮﭘﺎ ﻣﺜﺒﺖ ﺍﺛﺮﺍﺕ ﺑﮭﯽ ﻣﺮﺗﺐ ھوﺗﮯ ھیں۔
ﻗﻮﺕ ﻣﺪﺍﻓﻌﺖ :
ﻣﺨﺘﻠﻒ ﺑﯿﻤﺎﺭﯾﻮﮞ ﺳﮯ ﻟﮍﻧﮯ ﺍﻭﺭ ﺯﺧﻤﻮﮞ ﮐﮯ ﺑﮭﺮﻧﮯ ﻣﯿﮟ ﮐﻠﯿﺪﯼ ﮐﺮﺩﺍﺭ ﻗﻮﺕ ﻣﺪﺍﻓﻌﺖ ﮐﺎ ھوﺗﺎ ھے ﺍﻭﺭ ﺟﮍﯼ ﺑﻮﭨﯿﻮﮞ ﮐﮯ ﺍﺳﺘﻌﻤﺎﻝ ﺳﮯ ﻗﻮﺕ ﻣﺪﺍﻓﻌﺖ ﻣﯿﮟ ﺍﺿﺎﻓﮧ ھوﺗﺎ ھے، ﺟﻮ ﭘﮭﺮ ﺟﻠﺪ ﺯﺧﻢ ﺑﮭﺮﻧﮯ ﯾﺎ ﺑﯿﻤﺎﺭﯼ ﮐﮯ ﻋﻼﺝ ﮐﺎ ﺫﺭﯾﻌﮧ ﺑﻦ ﺟﺎﺗﯽ ھے.
ﻣﯿﭩﺎﺑﻮﻟﺰﻡ :
ﺑﮩﺘﺮﯾﻦ ﻗﻮﺕ ﻣﺪﺍﻓﻌﺖ ﺍﻭﺭ ﺳﺎﺩﮦ ﻃﺮﺯِ ﺯﻧﺪﮔﯽ ﻣﯿﭩﺎﺑﻮﻟﺰ ‏( ﻧﻈﺎﻡ ﺍﺳﺘﺤﺎﻟﮧ ‏) ﮐﻮ ﺑﮍﮬﺎﻧﮯ ﻣﯿﮟ ﻧﮩﺎﯾﺖ ﻣﻌﺎﻭﻥ ﺛﺎﺑﺖ ھوﺗﺎ ھے۔ ﺟﮍﯼ ﺑﻮﭨﯿﻮﮞ ﮐﮯ ﺫﺭﯾﻌﮯ ﻋﻼﺝ ﮐﮯ ﺩﻭﺭﺍﻥ ﺟﻨﮏ ﻓﻮﮈ، ﭘﯿﺰﺍ، ﺑﺮﮔﺮ اور کولڈ ڈرنکس ﻭﻏﯿﺮﮦ ﺳﮯ ﺧﺼﻮﺻﯽ ﻃﻮﺭ ﭘﺮ ﭘﺮھیز ﮐﺮﻭﺍﯾﺎ ﺟﺎﺗﺎ ھے، ﺟﺲ ﮐﺎ ﻓﺎﺋﺪﮦ ﻋﻼﺝ ﮐﮯ ﺳﺎﺗﮫ ﺳﺎﺗﮫ ﺩﺭﺳﺖ ﻣﯿﭩﺎﺑﻮﻟﺰﻡ ﮐﯽ ﺻﻮﺭﺕ ﻣﯿﮟ ﺑﮭﯽ ﻧﻤﻮﺩﺍﺭ ھوﺗﺎ ھے۔
ﻣﻀﺮﺍﺛﺮﺍﺕ :
ﺍﺱ ﺣﻘﯿﻘﺖ ﺳﮯ ﺍﻧﮑﺎﺭ ﻧﮩﯿﮟ ﮐﯿﺎ ﺟﺎﺳﮑﺘﺎ ﮐﮧ ﺟﮍﯼ ﺑﻮﭨﯿﻮﮞ ﮐﮯ ﺫﺭﯾﻌﮯ ﻃﺮﯾﻘﮧ ﻋﻼﺝ ﻣﯿﮟ ﺑﮭﯽ ﺳﺎﺋﯿﮉ ﺍﻓﯿﮑﭧ ﮐﺎ ﺧﺪﺷﮧ ﺭھتا ھے، ﻟﯿﮑﻦ ﺩﯾﮕﺮ ﺍﺩﻭﯾﺎﺕ ﮐﯽ ﻧﺴﺒﺖ ﻧﺒﺎﺗﺎﺗﯽ ﻋﻼﺝ ﻣﯿﮟ ﯾﮧ ﺷﺮﺡ ﻧﮩﺎﯾﺖ ﮐﻢ ھوتی ھے۔ اگر علاج کرنے والا طبیب ماھر ھو اور جڑی بوٹیوں کے خواص اور انکے مزاج پر عبور رکھتا ھو تو وہ اس طریق سے نسخہ بناتا ھے کہ مریض کو فائدہ ھی پہنچے،

آخری بات یہ عرض کرنی ھے کہ
کسی قسم کی دوائی استعمال کرنے سے قبل کسی مستند طبیب یا ماھر حکیم سے مشورہ ضرور کرلیں، نیز پنساریوں سےدوائیاں خریدتے وقت اچھی کوالٹی کی صاف ستھری اور پہچان کرکے اشیاء لیں، کیونکہ کئی پنساریوں کو بھی کئی چیزوں کا علم نہیں ھوتا اور وہ کوئی اور چیز ھی دے دیتے ھیں، نیز کسی قسم کے کشتہ جات، طاقت کی دوائیں، ویاگرا ٹائپ گولیاں اور کیپسول ازخود استعمال نہ فرمائیں تاکہ بعد کی پریشانیوں سے بچ سکیں،
جو دوست طبابت و حکمت یا دیسی دوائیاں بنانے میں دلچسپی رکھتے ھوۓ کوئی نسخہ بنانا چاھتے ھوں ان سے درخواست ھے کہ ادویہ کی مکمل چھان بین اور پہچان کے بعد ھی نسخہ بنائیں،
اسکی مثال ایسی ھی ھے کہ ھم کسی کو اپنے گھر پہچان اور تسلی کے بعد یا کسی قابلِ اعتبار شخص کی وساطت سے ھی داخل کرتے ھیں، اسی طرح کسی دوائی کو اپنے منہ میں داخل کرنے سےقبل کسی قابل اعتبار شخص سے پوچھ لیں یا خود اچھی طرح تسلی
کرلیں، اگر خدا نخواستہ غلط نسخہ بن گیا تو اللہ نہ کرے نقصان بھی ھو سکتا ھے،
اللہ تعالی آپ سب کو صحت مند زندگی عطا فرماۓ، آمین،
~ ابنِ سلطان ~

اپنا تبصرہ بھیجیں